ٹیکنالوجی

خود ساختہ خلائی مخلوق کے ماہر نے مریخ پر خلائی مخلوق کی جانب سے اہرام مصر جیسی عمارت بنانے کا دعویٰ کردیا

[ad_1]

خود ساختہ خلائی مخلوق کے ماہر نے مریخ پر خلائی مخلوق کی جانب سے اہرام مصر …

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) خلائی مخلوق کے وجود پر یقین رکھنے والے ایک سازشی نظریہ ساز نے مریخ پر خلائی مخلوق کی طرف سے بنایا گیا ایک قدیم ’اہرام‘دریافت کرنے کا دعویٰ کر دیا ہے۔ ڈیلی سٹار کے مطابق سکاٹ سی وارنگ نامی یہ خودساختہ ماہر قبل ازیں بھی خلائی مخلوق کے متعلق کئی طرح کے دعوے کر چکا ہے۔ اس حالیہ دعوے میں اس نے مریخ کی سطح کی ایک تصویر شیئر کی ہے جس میں اہرام مصر جیسی ایک عمارت کا ہیولہ سا دیکھا جا سکتا ہے۔

سکاٹ سی وارنگ اس مبینہ عمارت کے بارے میں بتاتا ہے کہ یہ مریخ کی سطح پر خلائی مخلوق کا بنایا گیا اہرام ہے۔ اس کی اہرام کی لمبائی 5کلومیٹر ہے اور خلائی مخلوق نے اسے مصنوعی ذہانت کی ٹیکنالوجی کے حامل روبوٹس کے ذریعے بنایا تھا۔ تاحال ناسا یا کسی دیگر ادارے کے ماہرین کی طرف سے سکاٹ سی کے اس دعوے پر ردعمل سامنے نہیں آیا۔ 

رپورٹ کے مطابق سکاٹ کی طرف سے شیئر کی گئی اس تصویر میں دیکھا جا سکتا ہے کہ مریخ کی سطح پر موجود اس مبینہ اہرام کے اہرام مصر کے برعکس چار کونے ہیں اور سکاٹ کے بقول یہ اہرام کم از کم 3کلومیٹر بلند ہے۔ واضح رہے کہ چند روز پہلے ہی سکاٹ سی وارنگ کی طرف سے دعویٰ کیا گیا تھا کہ گوگل ارتھ کے فیچر ’مارس آن ارتھ‘ (Mars on Earth)کے ذریعے اس نے گوگل ارتھ پر خلائی مخلوق کو دیکھا ہے۔ اہرام مصر کی اس تصویر کے متعلق بھی سکاٹ سی وارنگ کا دعویٰ ہے کہ اس نے گوگل ارتھ کے ذریعے ہی حاصل کی ہے۔

مزید :

سائنس اور ٹیکنالوجی



[ad_2]
Source link

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published.

Back to top button