ٹیکنالوجی

دور کھڑے مالک نے بنا ڈرائیور چلنے والی خود کار گاڑی کو اپنے پاس بلایا لیکن اس دوران کتنا نقصان ہوگیا؟ 

[ad_1]

دور کھڑے مالک نے بنا ڈرائیور چلنے والی خود کار گاڑی کو اپنے پاس بلایا لیکن اس …

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) الیکٹرک کار ٹیسلا ایک خودکار گاڑی ہے جو بغیر ڈرائیور بھی چلتی ہے تاہم اس کے خودکار فیچر کے سبب اب تک کئی حادثات بھی رپورٹ ہو چکے ہیں۔ گزشتہ دنوں امریکہ میں ایسے ہی ایک حادثے میں ٹیسلا گاڑی نے 20لاکھ ڈالر مالیت کے ایک جہاز کو ٹکر دے ماری۔ میل آن لائن کے مطابق یہ گاڑی ایک ایئرپورٹ پر پارک ہوتی ہے اور اس کا مالک دور کسی جگہ پر موجود ہوتا ہے۔ 

مالک وہیں سے اس گاڑی کو اپنے پاس آنے کے لیے بلاتا ہے اور گاڑی خودکار طریقے سے چل کر اپنے مالک کی طرف جانے لگتی ہے کہ راستے میں کھڑے ایک چھوٹے طیارے کے پچھلے حصے سے ٹکرا جاتی ہے۔ طیارے سے ٹکرا کر بھی یہ گاڑی رکتی نہیں بلکہ طیارے کو دھکیلتے ہوئے ایک طرف کرتی اور راستہ بنا کر نکل جاتی ہے۔ 

رپورٹ کے مطابق گاڑی کی طیارے کو ٹکر مارنے کی یہ ویڈیو ویب سائٹ Redditپر پوسٹ کی گئی ہے جو تیزی سے وائرل ہو رہی ہے۔ بتایا گیا ہے کہ اس واقعے میں کار یا طیارے کو کوئی نقصان نہیں پہنچا کیونکہ کار جب طیارے سے ٹکرائی تو اس کی رفتار انتہائی سست تھی۔ 

مزید :

سائنس اور ٹیکنالوجی



[ad_2]
Source link

Related Articles

Leave a Reply

Your email address will not be published.

Back to top button